جنگ کی دھمکیاں مرعوب نہیں کر سکتی ،پاکستان ناقابل تسخیر ملک 

کسی بھی ملک کو اس غلط فہمی میں مبتلا نہیں رہنا چاہئے کہ وہ نیوکلیائی سطح پر پاکستان کو زیر کر سکے؍ پاکستان 
سرینگر؍ ۳ دسمبر؍الفا نیوز سروس ؍ بھارت کے تازہ میزائل نظام پر آج پاکستان نے واضح کر دیا کہ پاکستان کی ایٹمی صلاحیت ناقاقبل تسخیر ہے لہذا کسی بھی ملک کو اس غلط فہمی میں مبتلا نہیں رہنا چاہئے کہ وہ نیوکلیائی سطح پر پاکستان کو زیر کر سکے ۔انہوں نے مزید کہا کہ پاکستان کے ایٹمی پروگرام کو محفوظ اور پر امن قرار دیتے ہوئے پاکستان نے آج ہے کہ پڑوسی ممالک کو پاکستانی ایٹمی پروگرام سے کوئی خطرہ نہیں ہے اور یہ پر امن مقاصد کیلئے ہے ۔ تاہم پاکستان نے صاف کر دیا کہ نیوکلیائی ہتھیاروں کی پاکستان پہل نہیں کریگا ۔الفا نیوز سروس کے مطابق پاکستانی خارجہ سیکریڑی نے کہا ہے کہ پاکستان اپنے ایٹمی پروگرام کو توسیع دیگا اوراس سلسلے میں چین کے ساتھ بھی بات چیت کا عمل جاری ہے تاہم انہوں نے کہا کہ ملک میں دہشت گردی ضرور ہے لیکن اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ پاکستان کے ایٹمی اثاثے غیر محفوظ ہیں۔انہوں نے کہا کہ ملک کے ایٹمی اثاثے محفوظ ہیں اور سلامتی کیلئے بھی ہیں جس کو دیکھتے ہوئے ہمیں یہ فخر ہے کہ پاکستان کی فوج ایٹمی پروگرام کی نگہبان ہے اور ہمیں اس سلسلے میں دہشت گردوں کے حوالے سے کوئی خطرہ نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی فورسز اس قابل ہے کہ وہ اپنے ایٹمی پروگرام کی بھر پور حفاظت کرے تاہم انہوں نے خبردار کیا ہے کہ بھارت یا دیگر پڑوسی ممالک کو پاکستانی ایٹمی پروگرام سے صرف اس صورت میں خطرہ ہوسکتا ہے جب ان پر پیش گی حملہ کیا جائیگا ،تاہم انہوں نے صاف کر دیا ہے کہ پاکستان کی پالیسی ہے کہ وہ پاکستان کسی بھی طرح کی جنگ میں نیوکلیائی ہتھیاروں کے استعمال میں پہل نہیں کریگا ۔انہوں نے مزید کہاکہ حالات کو جو بھی ہوں پڑوسی ممالک کو ایٹمی پروگرام سے کوئی خطرہ نہیں ہوسکتا ہے اور نہ ہی اس طرح کے عزائم پاکستان رکھتا ہے کہ وہ اپنے نیوکلیائی ہتھیاروں سے پڑوسی کو ڈرا دھمکا سکے ۔ اس دوران انہوں نے مزید کہاکہ پاکستان کا یہ موقف ہے کہ ایٹمی پروگرام کو پروان چڑھانے کیلئے لازمی ہے کہ ہم اس سلسلے میں ہر ممکن سطح پر تدبر اور تحمل کا مظاہرہ کریں تاہم انہوں نے اس تاثر کو یکسر مسترد کر دیا ہے کہ دہشت گردی پاکستان کے ایٹمی پروگرام تک رسائی چاہتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ محفوظ پروگرام ہے اور ملک کے استحکام کیلئے ہے ۔لہذا کسی کو اس سے کوئی خطرہ نہیں ہوگا ۔پاکستان کے سیکرٹری خارجہ اعزاز احمد چوہدری کا کہنا ہے کہ پاکستان کا جوہری پروگرام مکمل طور پر محفوظ اور خطے میں استحکام کے لئے ہے۔ اعزاز احمدچوہدری کا کہنا تھا کہ پاکستان کا ایٹمی پروگرام قومی دفاع اور کم سے کم ایٹمی صلاحیت کے حصول کے لئے ہے اور اس کا مقصد خطے میں استحکام کو محفوظ بنانا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دنیا کے مختلف ممالک میں جوہری مواد اور جوہری پلانٹس میں کئی حادثات اور واقعات رونما ہوئے لیکن پاکستان میں ایسا کچھ نہیں ہوا، پاکستان کا ایٹمی پروگرام مکمل طور پر محفوظ ہے اور اسے کسی قسم کا خطرہ لاحق نہیں ہے، جوہری تنصیبات کی حفاظت پاکستان کی قومی ذمہ داری ہے اور نیشنل کمانڈ اتھارٹی اس حوالے سے انتظامات کا جائزہ لے کر اقدامات اٹھاتی رہتی ہے۔ پاکستان کی جانب سے اپنے ایٹمی مواد اور جوہری تنصیبات کے تحفظ اور سلامتی کے لئے کئے گئے اقدامات کا اعتراف امریکا اور ایٹمی توانائی کے بین الاقوامی ادارے بھی کرتے ہیں۔الفا نیوز سروس کے مطابق پاکستان کا کہنا تھا کہ وہ اپنے پڑوسی ممالک کیساتھ بہترتعلقات چاہتا ہے اور اس سلسلے میں اسے بھارت کیساتھ خارجہ سیکریڑی سطح کے مذاکرات کی بحالی کی پوری امید ہے ۔ان کاکہنا تھا کہ دونوں ممالک کے درمیان پٹھان کوٹ سانحے نے تلخیاں پیدا کر دی ہیں اور اب اس صورت میں مزید اقدمات اٹھائے جا رہے ہیں کیونکہ دونوں ممالک کے تحقیقاتی آفسران مشترکہ طور پر اس کی تحقیقات کر رہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم چاہیں گے کہ دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کو فروغ دینے کی ہر ممکن کوشش کی جائے اور آپسی رشتوں کو بھی بہتر بنایا جا ئے اور یہ سب کچھ دونوں ممالک کے درمیان امن مذاکرات کی بحالی سے ہی ممکن ہو سکتا ہے ۔ان کا کہنا تھا کہ دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کو برقرار رکھنے کیلئے آپسی طور پر بات چیت کی بحالی لازمی ہے اور اس پر کوئی سمجھوتہ نہیں کیا جاسکتا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Social media & sharing icons powered by UltimatelySocial