بندوق اٹھانے والے کشمیری نوجوان ملی ٹنٹ نہیں 

بھارت کشمیریوں کی نسل کشی کا مرتکب :شمیمہ فردوس
سری نگر؍؍کے این این؍؍مین اسٹریم جماعت نیشنل کانفرنس نے کہا ہے کہ بندوق اٹھانے والے کشمیری نوجوان ملی ٹنٹ نہیں بلکہ وہ معصوم شہری ہیں۔پارٹی کی ریاستی خواتین ونگ کی صدر اور ممبر اسمبلی حبہ کدل شمیمہ فردوس نے الزام عائد کیا کہ بھارت کشمیریوں کی نسل کشی کا مرتکب ہو رہا ہے ۔کے این این کے مطابق وسطی ضلع گاندر بل میں ایک تقریب کے حاشئے پر نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے نیشنل کانفرنس کی خواتین ونگ کی صدر اور ممبر اسمبلی حبہ کدل شمیمہ فردوس نے کہا کہ جو کشمیری نوجوان بندوق اُٹھا رہے ہیں ،وہ ملی ٹنٹ نہیں ۔انہوں نے کہا کہ وہ پاکستانی تربیت یافتہ جنگجو نہیں ،اس لئے اْنہیں جنگجو نہیں قرار دیا جاسکتا ہے۔شمیمہ فردوس کا کہناتھا کہ نوجوان پہلے سنگبازی کرتے ہیں ،پھر جنگجوؤں کے صف میں شامل ہونے کا دعویٰ کرتے ہیں لیکن وہ پاکستانی تربیت یافتہ نہیں ۔اسلئے کیسے کہہ سکتے ہیں وہ ملی ٹنٹ۔انہوں نے کہاکہ مقامی نوجوانوں کوجنگجوقراردینے کے پیچھے یہ مقصدکارفرماہے کہ اُنھیں ختم کیاجائے ۔شمیمہ ردوس نے الزام لگایاکہ نسل کشی کرنے کیلئے بھارت کچھ بھی کرسکتاہے۔انہوں نے مزیدکہاکہ سنگبازاورملی ٹنٹ قراردیکرہم سے چھوٹے چھوٹے بچے جدا کئے گئے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *