ڈونی واری رفیع آبادمیں جنگجومخالف آپریشن اختتام پذیر

ایک اورجنگجوازجان:کل5عدم شناخت شدہ عساکرجاں بحق
سری نگر؍؍کے این این؍؍شمالی کشمیرمیں علاقہ رفیع آباد کے ایک مضافاتی جنگل میں مزید ایک جنگجوکے جاں بحق ہوجانے کیساتھ اختتام پذیرہوئی ،اوراس طرح سے بدھ کی صبح سے جاری خونین معرکہ کے دوران5عدم شناخت شدہ جنگجوازجان ہوگئے جبکہ بدھ کی صبح یہاں گولیاں لگنے سے ایک پیراکمانڈؤزخمی ہواتھا۔رفیع آبادکے جنگلی علاقہ میں تلاشی آپریشن جاری رکھا گیا ہے۔پولیس چیف ڈاکٹرایس پی ویداوردفاعی ترجمان راجیش کالیہ نے اسبات کی تصدیق کی کہ پانچواں جنگجوبھی جھڑپ کے دوران ماراگیا۔خیال رہے ڈی جی پی ڈاکٹرویدنے بدھ کے روزکہاتھاکہ جنگل میں 5جنگجوموجودہیں ۔کشمیرنیوزنیٹ ورک کے مطابق جمعرات کی صبح علاقہ رفیع آبادکے ڈونی واری گاؤں کے مضافاتی جنگل میں جاری جھڑپ کے دوران ایک اورجنگجوماراگیا۔ فوج کی چنار کور نے اپنے آفیشل ٹویٹر اکاونٹ پر ایک ٹویٹ میں کہا کہ بارہمولہ آپریشن میں جنگل سے ایک اور جنگجو کی لاش برآمد کی گئی۔دفاعی ترجمان کرنل راجیش کالیہ نے بتایاکہ بدھ کی صبح سے جاری اس آپریشن کے دوران 5جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا،اورجائے جھڑپ سے ہتھیار اور جنگی سازوسامان برآمد کیا گیا۔انہوں نے بتایاکہ جنگلی علاقہ میں تلاشی کارروائی ابھی آپریشن جاری ہے ۔ اس دوران ریاستی پولیس کے سربراہ ڈاکٹر شیش پال وید نے اپنے ایک ٹویٹ میں کہاکہ جنگل میں موجودپانچویں جنگجو نے جمعرات کی صبح گولیاں چلائیں۔ اورسیکورٹی اہلکاروں کی جوابی کارروائی میں وہ مارا گیا۔خیال رہے بدھ کوڈونی واری رفیع آبادکے نزدیکی جنگل میں خونین معرکہ آرائی کے دوران4جنگجومارے گئے تھے جن کی ابھی تک پولیس یافوج نے شناخت ظاہرنہیں کی ہے ۔دفاعی ترجمان نے بتایا کہ مسلح تصادم میں اب تک پانچ مسلح جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ مارے گئے جنگجوؤں کی شناخت ہونا ابھی باقی ہے ۔ دفاعی ذرائع نے بتایا کہ جنگجو مخالف آپریشن میں فوج کی 32 راشٹریہ رائفلز (آر آر) ، 9پیرا کمانڈوز اور ریاستی پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ کے اہلکاروں نے حصہ لیا۔ انہوں نے بتایاکہجنگجوؤں کی ابتدائی فائرنگ میں ایک فوجی اہلکار زخمی ہوا جس سے علاج ومعالجہ کے لئے اسپتال میں داخل کرایا گیا ۔پولیس چیف ڈاکٹرایس پی ویدنے بدھ کے روز اپنے ایک ٹویٹ میں کہا تھاکہ رفیع آباد کے ڈونی واری جنگلات میں مسلح تصادم جاری ہے۔جہاں5 جنگجوؤں کی موجودگی کی اطلاع ہے ۔اُدھرفوج نے ضلع بانڈی پورہ میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے گریز سیکٹر جہاں پیر اور منگل کی درمیانی رات کے دوران ہوئے مسلح تصادم میں 2 فوجی اور 2 جنگجو مارے گئے، میں تلاشی آپریشن جمعرات کو مسلسل تیسرے دن بھی جاری رکھا گیا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ایل او سی کے گریز سیکٹر میں جنگجوؤں کی تلاش بڑے پیمانے پر جاری ہے۔ تاہم گذشتہ 48 گھنٹوں کے دوران فوج کاجنگجوؤں سے کوئی آمنا سامنا نہیں ہوا ہے۔ انہوں نے بتایا ’جنگجوؤں کو فرار ہونے سے روکنے کے لئے ایک وسیع جنگلی علاقہ کو محاصرے میں لیا گیا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *